انقرہ(بی بی سی )ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے قرآن کریم کی کچھ آیات حذف کرنے کے مطالبے کی سختی سے مذمت کی ہے۔21 اپریل کو سابق فرانسیسی صدور اور وزراء اعظم سمیت 300فرانسیسی دانشوروں نے ایک عرضی پر دستخط کیے تھے جس میں مطالبہ کیا گیا تھا کہ قرآن شریف کی ان آیات کو حذف کیا جائے جس میں یہود اور نصاری سمیت کافروں کو قتل یا سزا دی جائے ۔جواب میں اردوان نے اس مطالبے کو انتہائی گھٹیا قرار دیتے ہوئے مغربی ممالک کو منافق اور اسلام دشمن سے تشبیہ دے دی

This Post Has Been Viewed 3 Times