شہدادکوٹ( بیرروچیف جھانگیر شیخ) سپریم کورٹ کے احکامات کے بعد سی آئی اے پولیس حرکت میں آ گئی گٹکا فروشوں کے خلاف کریک ڈاؤن، مقامی جنرل اسٹور اور گدام پر چھاپہ، مضر صحت گٹکے کے 736 پیکٹ اور 550 غیر ملکی اسمگل شدہ سگریٹ کے بنڈل برآمد، 4 ملزمان گرفتار مقدمہ درج۔ تفصیلات کے مطابق سی آئی اے پولیس کے انچارج غلام مصطفیٰ کھوسو نے پولیس کی نفری کے ہمراہ شہدادکوٹ کے ریلوے اسٹیشن روڈ پر واقع حیات جنرل اسٹور اور اس سے ملحقہ گدام پر چھاپہ مار کر مضر صحت گٹکے کے 736 پیکٹ اور اسمگل شدہ غیر ملکی سگریٹ کے 550 بنڈل برآمد کر لئے جن کی مالیت 20 لاکھ روپے بتائی جارہی ہے۔برآمد کئے گئے گٹکے میں پان پراگ، ون ٹو ون، رجنی، اسپیڈ اور جے ایم گٹکا شامل ہیں۔چھاپے کے دوران مذاہمت پر دکان مالکان اور پولیس کے درمیان جھڑپیں ہوئیں اور بدکلامی کے بعد ہاتھاپائی ہوگئی جس پرسی آئی اے انچارج نے ضلع کے تھانوں سے مذید پولیس نفری کو طلب کرلیا اس دوران ڈی ایس پی شہدادکوٹ شرف الدین سومرو اور ایس ایچ او میران خان درانی بھی بھاری نفری کے ہمراہ پہنچ گئے اور گٹکا اور سگریٹ برآمد کرکے چاروں ملزمان دکان مالک وسیم شیخ ، سعید شیخ ، سلیم شیخ اور ملازم قربان سومرو کو گرفتار کر کے لاک اپ کردیا۔ شہدادکوٹ کے تھانہ اے سیکشن کی پولیس نے سرکاری مدعیت میں گٹکا رکھنے اور ڈیوٹی میں مداخلت کرنے پر گناہ نمبر 49/2018. دفعہ 269/270/273/353/186/148/149/506/2 کے تحت مقدمہ درج کرلیا ہے. اس سلسلے میں ڈی ایس پی شرف الدین سومرو, ایس ایچ او میران خان درانی اور سی آئی اے پولیس قمبر شہدادکوٹ کے انچارچ غلام مصطفیٰ کھوسو نے میڈیا کو بتایا کہ مزکورہ کاروائی خفیہ اطلاع پر کی گئی ہے۔ دوسری جانب رابطہ کرنے پر ایس ایس پی ڈاکٹر اسد اعجاز ملہی نے بتایا کہ سپریم کورٹ کے احکامات کے بعدگٹکا فروشوں کے خلاف کریک ڈاؤن شروع کیا گیا ہے مزکورہ کاروائی شہدادکوٹ کی تاریخ کی بڑی کاروائی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ایسے عناصر کو ہرگز معاف نہیں کیاجائے گا جبکہ شہدادکوٹ سمیت ضلع بھر میں مذید کاروائیاں کی جائیں گی۔

This Post Has Been Viewed 4 Times