سری نگر(بی بی سی )مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فوجیوں نے سرچ آپریشن کے نام پر مزید 2 نوجوانوں کو شہید کردیا۔جنوبی کشمیر کے ضلع اسلام آباد میں ڈورو علاقے میں بھارتی فوجیوں نے سرچ آپریشن کے دوران نام پر فائرنگ کی ۔ شیشتر گام ڈورو میں فوج کی 19 راشٹریہ رائفلز ، جموں وکشمیر پولیس کے اسپیشل آپریشن گروپ اور سینٹرل ریزو پولیس فورس نے مذکورہ علاقہ میں تلاشی آپریشن شروع کیا۔نوجوانوں کی شہادت پر ہفتے کو اسلام آباد ضلع میں نمکمل ہڑتال رہی جبکہ علاقے میں بھارتی فوج کے خلاف مظاہرے کیے گئے جس پر بھارتی فورسز کی جانب سے آنسو گیس کی شیلنگ اور ربڑ کی گولیاں برسائی گئیں جب کہ وادی میں موبائل و انٹرنیٹ سروس بھی معطل کردی گئی ہے۔خیام میں 161بٹالین سی آر پی ایف کیمپ پر گرینیڈ پھینکا گیا تاہم وہ پھٹنے سے رہ گیا۔اس کے بعد علاقے کو محاصرہ میں لیا گیا اور بم ڈسپوزل سکارڈ کو طلب کر کے گرینیڈ کو ناکارہ بنایا گیا۔واقعہ سے آس پاس کے علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا۔ادھرکیرن سیکٹر کپوارہ میں 9سکھ لائی رجمنٹ سے وابستہ حوالدار درشن سنگھ اچانک بیہوش ہوگیا اور اسے فوری طور پر فوجی اسپتال منتقل کیا گیا جہاں ڈاکٹروں نے کہا کہ مذکورہ فوجی کی حرکت قلب بند ہونے سے موت واقع ہوئی ہے

This Post Has Been Viewed 4 Times