پاکستان ٹائم شانگلہ الپوری (رضاشاہ ) محمد عمر عمرذادہ محمد رشاد کی شانگلہ پریس کلب میں پریس کانفرنس میں وضاحت کرتے ہوے
بونیر کی رہاشی عمر ذادہ کی بیٹی تسلیم بی بی جس کا نکاح محمدرشادسے دو ماہ پہلے ہوا تھا انھوں نے کہا کہ ہم دزشتہ بیس سالوں سے تودہ چینہ بونیر میں رہایش بزیرہیں میری بیٹی تسلیم بی بی جس کی عمر اٹھارہ سال ہے اور اس کانکاح میرے بھانجے محمد رشاد سے ہوا تھا تا ہم ابھی رخصتی باقی تھی لیلونیی میں میرے رشتہ دار محمدعمر نے اس سے شادی سے پہلے مہمان داری کی دعوت دی تھی اور ان ہی کے گھر سے عمر حسن ولد سلطان ساکن بانڈہ بیلے بابا نے انھیں اغوا کیا ہے محمدعمر نے کہا کہ میں نے چھ دن پہلے الپوری تھانہ میں رپورٹ درج کرالی ہے مگر ابھی تک ملزم کے خلاف کسی قسم کا الیف الی۔ار درج نہیں کرای گی ہے اور مقامی پولیس لیل ولت سے کام لے رہی ہیں لہذاہ ہم الی ،جی خیبر پختون خواہ ۔ڈی۔ای ،جی ملا کنڈ اور ڈی ،پی۔او شانگلہ سے اپیل کرتے ہیں کہ ملزمان کے خلاف فوری الیف ،ای ،ار درج کرانے کی احکامات جاری کیے جایں اور لڑکی کوبازیاب کر کے ہمارے حوالے کیاجاے انھوں نے وازیر اعلی پرویز خٹک اور چیف جسٹس پشاور ہالی کوٹ سے بھی مطالبہ کیا ہے کہ مقامی پولیس کو ہمارے ساتھ تعاون کرانے پرامادہ کیا جاے اور مجرموں کو گرفتار کرکے قانونی تقا ضے پورے کیے جاے کیونکہ اس وقت صوبے میں پاکستان تحریک انصاف کا حکومت ہے لہذاہ ہمارے ساتھ بھی انصاف کیا جاے اور ہمیں بھی انصاف دیلالی جاے ۔انھوں نے صوبالی حکام بالا سے امید ظاہر کی کے وہ ہمارے ساتھ ہونے والے ظلم کے ازالے کی ہر ممکین تعاون کرینگے ۔

This Post Has Been Viewed 9 Times