شانگلہ الپوری (رضاشاہ سے ) پاکستان تحریک انصاف کے کارکنان نے گزشتہ روز ضلعی ھیڈ کواٹر الپوری میں ضلع ناظم ۔ایم۔این۔اے ۔کے خلاف احتجاجی مظاہرہ کیا مظاہرین نے نو متخب ممبران کے خلاف مرداباد کے شدید نعررہ بازی اور اس بات پر سخت افسوس کا اظہار بھی کیا کے صوبالی حکومت نے شانگلہ کی موجودہ پسماندہ گی کو دور کرنے کیلے ایم ۔پی۔ایے ۔شوکت یو سفزی کی وساطت سے 53کروڑ روپے کا فنڈز منظور کیا ہے لیکن ضلع ناظم شانگلہ نیاز احمد خان اور ایم ۔این ۔اے ڈاکٹر عباد اللہ نے اس ترقیاتی فنڈز پر سپریم کوٹ سے سٹے ارڈر لیا ہوا ہے جسکی وجہ سے جن ترقیاتی منصبوں پر ٹینڈر ہوچکے ہیں لیکن فنڈز کی عدم دستیابی کی وجہ سے اب ان منصوبوں پر تعمیراتی کام بند ہوچکا ہے جو شانگلہ کے عوام کے ساتھ سراسر ظلوم اور نا انصافی ہے کیونکہ اس وقت سیاسی مخا لیفن بوکلا ہٹ کا شکار ہو چکے ہیں اور اب انچھے ہتکھنڈوں پر اتر ایے ہیں اور ایے روز نیے نیے بہانے تلاش کر رہے ہیں احتجاجی ریلی سے وقار احمد خان نے خطاب کرتے ہوے کہاکے اس وقت پاکستان تحریک انصاف پورے ملک اور بالخصوص ضلع شانگلہ کی ایک مقبول ترین جماعت بندچکی ہے جسکی وجہ سے سیاسی حریف اسے نا مناسب رویہ اختیار کر رہے ہیں انھوں نے کہا کے ایسے ہتکھنڈوں سے ہم ڈرنے والے نہیں ہیں انشااللہ انے والے الیکشن میں ہم مورثی سیاست کا خاتمہ کرینگے کیونکہ اب شانگلہ کا غیور عوام جاگ گیے ہیں اور پلاسٹک کے پایپ اور بجلی کے خالی کھمبوں پر مزید اپنے ضمیروں کا مزید سوداہ نہیں کرینگے انھوں نے خبر دار کرتے ہوے کہا کے اگر سیاسی مخالیفن اپنے اس عوام دوشمن پالسی سے باز نہیں تو ہم اپنے احتجاج کا دایرہ مزید واصح کرینگے اور یہاں تک کے پورے ضلع شانگلہ کے کونے میں مختلف اوقات میں احتجاجی سلسلہ جاری رکھنگے اگر احتجاج جے دوران کسی قسم کی لاین اف ارڈر کا وقعہ پیش ایا تو اسکی تمام تر ذمداری ضلع ناظم شانگلہ پر عاید ہوگی احتجاجی ریلی سے تحریک انصاف کے دیگر قاعدین میں سے حاجی راحیم داد۔ علامہ اقبال ،گل امرز ۔چاچا محمد زمان نے بھی خطاب کیے

This Post Has Been Viewed 12 Times