شکارپور (امیر علی بھٹو) شکارپور پولیس کا جرائم پیشہ عناصر کے خلاف آپریشن ،گڑھی تیغو کے علائقہ پر پوری توجہ ،اغوا برائے تاوان کے مغویوں کو ان علائقوں میں رکھا جاتا ہے پہلے بھی یہاں سے 10لاکھ روپیہ انعام یافتہ ڈاکو گرفتار کیاگیاہے اس کے زندہ یا مردہ گرفتاری پر انعام تھا۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز ایس ایس پی شکارپور عمر طفیل نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے بتایا کہ شکارپور پولیس نے گذشتہ دوماہ میں کاروائیوں کے دوران 5 کلانشنکوف، 4رائفل ، 25 گن ،35 پسٹل اور 200 میگزین برآمد کیے ہیں ، اس کے علاوہ 90 کلو چرس اور35 کلو بھنگ بھی برآمد کی گئی، اس دوران 100 سے زائد پولیس مقابلے ہوئے جس میں 365 ملزمان گرفتار ہوئے جن میں 18 کو زخمی حالت میں گرفتار کیا گیا ، دوسری جانب شکارپور پولیس کی تحصیل خانپور کے علائقے گڑھی تیغو میں کاروائی 8 افراد گرفتار جن میں 4 کی شناخت ہوگئی اور باقی چار ملزمان کے خلاف تفتیش جاری ہے،گرفتارہونے والے چاروں ڈاکؤں سے اسلحہ برآ مد کیاگیا ہے ، انہوں نے بتایا کہ آئی جی سندھ کے احکامات پر اغوا برائے تاوان، ڈکیتی اور دوسرے سنگین مقدمات میں ملوث افراد کے خلاف گڑھی تیغو میں آپریشن کیا گیا جس کے نتیجے میں چار افراد کو گرفتار کیا گیا جن کی شناخت پشو چار مقدمات، امیر بخش دس مقدمات، شلو جتوئی پانچ مقدمات اور صاحب ڈنو جعفری 8 مقدمات تفتیش کے دوران سامنے آئے ہیں ، اس کے علاوہ دیگر اضلاع میں بھی ان کے خلاف مقدمات درج ہیں ، گرفتار تمام ملزمان پولیس اہلکاروں کے قتل ،اغوا برائے تاوان، روڈ ڈکیتی ودیگر سنگین جرائم میں ملوث ہیں ، ایس ایس پی عمر طفیل کے مطابق شکارپور پولیس کی تمام تر توجہ گڑھی تیغو کے علائقے پر ہے جہاں ڈاکوں کی پناہ گاہیں ہیں، اغوا ہونے والے مغویوں کو ان علائقوں میں رکھا جاتا ہے جہاں سے تاوان کے مطابلے کیے جاتے ہیں، پولیس کو بڑی کامیابی اس وقت ملی جب کاروائی کے دوران بدنام زمانہ ڈاکو مصطو جعفری کو کو گرفتار کیا گیا تھا جس پر چالیس مقدمات اور گرفتاری پر سندہ حکومت کی جانب سے 10 لاکھ روپے انعام زندہ یا مردہ گرفتاری پر رکھے گئے تھے، مختلف مقامات پر کاروائیوں کے دوران 22 موٹر سائیکلیں بر آمد کی گئیں، ایس ایس پی عمر طفیل کا مزید کہنا تھا کہ گڑھی تیغو کی سرحدیں چار اضلاع سے ملتی ہیں جس کی وجہ سے تھوڑے مسائل ضرور ہیں لیکن پولیس بہتر منصوبہ بندی کر رہی ہے اور آنے والے دونوں میں ان علائقوں میں کاروائی مزید تیز کر دیں گے، شکارپور کے خارجی اور داخلی راستوں پر ہونے والی نقل و حمل پر کڑی نظر رکھی جارہی ہے۔

شکارپور ( امیر علی بھٹو) درگاہ امروٹ شریف کے سید عزیز احمد شاہ امروٹی کا بیٹا اور سابق سی ایم او شکارپور سید امین شاہ سعودی عرب میں انتقال کر گئے ۔ تفصیلات کے مطابق درگاہ امروٹ شریف کے سید عزیز احمد شاہ امروٹی کے چوتھا نمبر نوجوان بیٹا سید امین شاہ سعودی عرب میں انتقال کر گیا ، اس سلسلے میں بتایا جارہا ہے کہ سید امین شاہ کافی عرصے سے بیمار تھے کچھ وقت پہلے طبیعت بہتر ہونے پر عمرہ کی سعادت حاصل کرنے کے لیے سعودی عرب گئے ہوئے تھے جہاں پر ان کی طبیعت خراب ہونے پر ان کو مدینہ منورہ کی اسپتال میں داخل کروایا گیا جہاں پر وہ قومہ میں چلے گئے بعدازاں طبیعت بہتر ی نہیں آئی اور وہ انتقال کر گئے ، مرحوم کے ورثاء کے مطابق مرحوم کو مدینہ منورہ میں ہی دفنایا جائے گا ، واضح رہے کہ مرحوم سید امین شاہ شکارپور میونسپل کمیٹی کا سابق سی ایم او اور سیٹھار جا یوسی کاٹاؤن آفیسر تھا۔

This Post Has Been Viewed 11 Times